کتابوں کی دنیا سے ماورا انٹرنیٹ کی دنیا اتنی وسیع ہے کہ اس پر ہر طرح کی معلومات یکجا ہو گئی ہیں اور ایسا لگتاہے کہ دنیا ایک مٹھی میں سمٹ آئی ہے۔آج انٹر نیٹ کی بدولت ہم گھربیٹھے ساری دنیا کی سیر کر لیتے ہیں۔انٹرنیت ایک ایسی دنیا بن گئی ہے جہاں ضروریات انسانی کی ساری چیزیں  موجود  ہیں۔ اس کی اہمیت و افادیت کا اندازہ اس بات سے بھی لگایا جا سکتا ہے  کہ یہاں پر ہر چھوٹے بڑے کام انجام دیےجا رہے ہیں۔انٹرنیٹ کی دنیا میں جہاں ایک طرف خرید و فروخت کی دکانیں کھلی ہیں تو دوسری جانب تعلیم کو دنیا کے  تمام گوشے میں پہچانے کا عمل جاری ہے۔دنیا کے تقریبا تمام علوم سے متعلق یہاں مواد مل جاتے ہیں۔ادب کی بات کریں تو یہاں انگریزی ، فرانسیسی،جرمن اوردیگر مغربی و مشرقی زبا ن و ادب کی ہر چھوٹی بڑی چیزیں مہیا ہیں۔ ہم  اردو والوں نے اس جانب خاطر خواہ  توجہ نہیں دی ہے،یہی وجہ ہے کہ اردو سے متعلق مواد  کم کم دستیاب ہیں۔ ادھر جا کر اردو کے جاں نثاروں نے اردو کے فروغ کے لئے جدید ٹکنالوجی کے استعمال پر توجہ دی ہے  لیکن ابھی ایک لمبا سفر طئے کرنا باقی ہے کیونکہ اردو کے حوالے سے جو مواد یہاں ملتے ہیں ان کو مشکوک نگاہوں سے دیکھا جاتا ہے۔ہمارا فکشن معیار و مقدار میں دنیا کی کسی بھی ترقی یافتہ زبان کے فکشن سے کم نہیں۔ لیکن مسئلہ یہی ہے کہ ہمارے ذخیرئہ ادب تک خود ہمارے قارئین کی رسائی مشکل سے ہو پاتی ہے۔ انٹرنیٹ پر اردو فکشن سے متعلق مستند مواد کی کمی کو ’’اردو فکشن ڈاٹ کام‘‘کے ممبروں نے شدت کے ساتھ محسوس کیا اور یہ ارادہ کیا کہ فکشن کے مواد کو انٹرنیٹ پر جمع کیا جائے ۔
 ’’اردو فکشن ڈاٹ کام ‘‘ کی خاص بات یہ ہے کہ یہاں نئے پرانے دونوں چراغ روشن ہیں۔یہاں پر ہماری ملاقات ہر عہد کے لکھنے والوں سے ہوتی ہے۔اردو کے تمام فکشن رائٹر کو  ان کے عہد کے مطابق پانچ ادوار میں تقسیم کیاگیا ہے۔ابتدائی دور میں راشد الخیری، پریم چند اور دوسرے لکھنے والے ہیں۔ ۱۹۳۶ کے بعد کے دور میں منٹو ،بیدی، کرشن چندر،احمد ندیم قاسمی، قرہ العین حیدر،عصمت وغیرہ ہیں ۔۱۹۶۰ کے عہد میں لکھنے والوں میں بلراج مین را، جوگیندر پال، سرندر پرکاش ممتاز مفتی  انتظار حسین وغیرہ ہیں۔۱۹۸۰ کے بعد کے لکھنے والوں میں پیغام آفاقی، طارق چھتاری، شموئل احمد،نورالحسنین، مشرف عالم ذوقی، احمد صغیر،صغیر رحمانی،ابن کنول وغیرہ کو رکھا گیا ہے۔۲۰۰۰ کے بعد جن تخلیق کاروں نے فکشن میں قدم رکھا ہے ان کی تخلیقات بھی شائع کی گئی ہیں تاکہ قارئین ہمارے نئے لکھنے والوں سے بھی متعارف ہو جائیں۔ گوشہ "افسانے"میں اردو کے علاوہ مشہور و معروف ہندی اور مغربی افسانوں کے اردو تراجم شائع کئے گئے ہیں۔ناول ، افسانوی مجموعے اور فکشن کی تنقید پر لکھی گئی کتابیں پی ڈی ایف کی شکل میں مہیا کر دی گئی ہیں تاکہ قارئین ڈاؤنلوڈ کرکے اپنی سہولت کے مطابق کتابوں کا مطالعہ کر سکیں۔
اردو فکشن ڈاٹ کام‘‘ کا ایک دلچسپ گوشہ ’’مضامین ‘‘کا ہے۔فکشن پر لکھے گئے تنقیدی و تحقیقی مضامین تقریبا ہر روز شائع کئے جاتے ہیں۔ آپ کو یہ بتا دوں کہ مضامین شائع کرنے کے معاملے میں اس سائٹ نے اپنا ایک معیار قائم کی ہے۔طئے شدہ معیار سے گرے مضامین واپس کر دیے جاتے ہیں چاہے وہ کسی کے بھی ہوں۔شاید یہی وجہ کہ اس کی مقبولیت دن بہ دن بڑھتی جارہی ہے۔نئے عہد کے مستند قلم کار یہاں اپنے مضامین شوق سے بھیجتے ہیں۔’’انٹرویو‘‘کا گوشہ بھی کافی اہم ہے۔ اس میں ہماری کوشش یہ ہوتی ہے کہ گفتگو کا موضوع فکشن ہی ہو ،تاکہ فکشن کی تفہیم کے نئے  دروازے کھلیں۔اس کے علاوہ کئی چھوٹے بڑے گوشے ہیں جن کی افادیت آج کے دور میں بہت اہم ہے۔مجموعی طور ہم بات کریں تو ’’اردو فکشن ڈاٹ کام‘‘ کے ممبروں کی یہ کوشش ہے کہ یہ آنے والے دنوں میں انٹرنیٹ پر اردو فکشن کی ایک ایسی لائبریری بن جائے جہاں فکشن کے حوالے سے ہر چھوٹی سی چھوٹی اور بڑی سی بڑی چیزیں دستیاب ہوں۔
یہ کوئی بہت آسان کام نہیں ہے لیکن ہماری ہمت جوان ہے ۔ ہم سے منسلک لوگ حوصلہ مند ہیں ۔ان سب کے باوجود ہمارے وسائل اور ذرائع محدود ہیں۔ہمیں آپ کے مشورے درکار ہیں۔یہ مشن صرف ہمارا نہیں ہے بلکہ آپ سب کا ہے۔اس سائٹ سے ہر اس شخص کا رشتہ ہے جو اردو زبان و ادب سے بالعموم اور اردو فکشن سے بالخصوص محبت رکھتے ہیں۔آپ کا تعلق کہیں سے بھی ہو آپ ہمارے لئے کام کر سکتے ہیں۔
آپ ہمیں ٹائپ کر کے افسانے بھیج سکتے ہیں۔سائٹ کو زیادہ سے زیادہ بہتر بنانے کے لئے آپ مالی تعاون بھی کرسکتے ہیں۔یا کم از کم آپ اپنے مفید مشوروں  سےہمیں نواز سکتے ہیں۔ ہمیں آپ سب کا ساتھ چاہئے تاکہ ہم سب مل کر انٹرنیٹ پر اردو فکشن کے مستند مواد اپنی آنے والی نسلوں کے لئے چھوڑ سکیں

اردو فکشن

© 2017 Urdu Fiction. All right reserved.

Developed By: Aytis Cloud Solutions Pvt. Ltd.